Sunday, May 26, 2024
General

How to apply for Hajj 2024 | Complete Guidelines | حج کے لئے کیسے اپلائی کریں | مکمل معلومات کے ساتھ

How to apply for Hajj 2024 | Complete Guidelines | حج کے لئے کیسے اپلائی کریں | مکمل معلومات کے ساتھ Hajj is the annual Islamic pilgrimage to Mecca, Saudi Arabia, the holiest city for Muslims. It is one of the Five Pillars of Islam, and is a mandatory religious duty that must be carried out at least once in their lifetime by all adult Muslims who are physically and financially capable of undertaking the journey. The Hajj takes place during the Islamic month of Dhu al-Hijjah, and lasts for five days. During this time, pilgrims perform a series of rituals and rites, including: Ihram: Pilgrims wear simple white garments and enter a state of ihram, which is a state of ritual purity. * Tawaf: Pilgrims circle the Kaaba seven times. * Sa’i: Pilgrims walk between the hills of Safa and Marwah seven times. * Waqfa at Arafat: Pilgrims stand on the plain of Arafat and pray for forgiveness and guidance. * Slaughtering of animals: Pilgrims slaughter animals and distribute the meat to the poor and needy. * Stoning the pillars: Pilgrims throw seven stones at each of the three pillars that represent the devil. * Farewell tawaf: Pilgrims circle the Kaaba seven times before departing from Mecca. The Hajj is a spiritual journey that is meant to test the faith and devotion of Muslims. It is a time to reflect on one’s sins and seek forgiveness from God. It is also a time to come together with Muslims from all over the world and unite in their faith. The Hajj is a physically demanding journey, but it is also a very rewarding experience. Pilgrims often describe the Hajj as a life-changing experience that has a profound impact on their faith and their relationship with God. حج مسلمانوں کے لیے مقدس ترین شہر مکہ، سعودی عرب کا سالانہ اسلامی حج ہے۔ یہ اسلام کے پانچ ستونوں میں سے ایک ہے، اور یہ ایک لازمی مذہبی فریضہ ہے جو ان تمام بالغ مسلمانوں کو اپنی زندگی میں کم از کم ایک بار ادا کرنا چاہیے جو جسمانی اور مالی طور پر سفر کرنے کی اہلیت رکھتے ہوں۔ حج اسلامی مہینے ذی الحجہ میں ہوتا ہے اور پانچ دن تک رہتا ہے۔ اس وقت کے دوران، حاجی عبادات اور رسومات کا ایک سلسلہ انجام دیتے ہیں، بشمول: احرام: حجاج سادہ سفید لباس پہنتے ہیں اور احرام کی حالت میں داخل ہوتے ہیں جو کہ رسمی پاکیزگی کی حالت ہے۔ *طواف: زائرین کعبہ کا سات بار چکر لگاتے ہیں۔ *سعی: حجاج صفا اور مروہ کی پہاڑیوں کے درمیان سات بار چلتے ہیں۔ * عرفات میں وقوف: حجاج میدان عرفات میں کھڑے ہو کر مغفرت اور رہنمائی کے لیے دعا کرتے ہیں۔ * جانوروں کا ذبح کرنا: حجاج جانور ذبح کرتے ہیں اور گوشت غریبوں اور ضرورت مندوں میں تقسیم کرتے ہیں۔ * ستونوں کو سنگسار کرنا: حجاج شیطان کی نمائندگی کرنے والے تین ستونوں میں سے ہر ایک پر سات پتھر پھینکتے ہیں۔ * الوداعی طواف: حجاج مکہ سے روانگی سے پہلے سات بار خانہ کعبہ کا طواف کرتے ہیں۔ حج ایک روحانی سفر ہے جس کا مقصد مسلمانوں کے ایمان اور عقیدت کو جانچنا ہے۔ یہ اپنے گناہوں پر غور کرنے اور خدا سے معافی مانگنے کا وقت ہے۔ یہ بھی وقت ہے کہ دنیا بھر کے مسلمانوں کے ساتھ اکٹھے ہوں اور اپنے عقیدے پر متحد ہوں۔ حج جسمانی طور پر ایک ضروری سفر ہے، لیکن یہ ایک بہت ہی ثواب بخش تجربہ بھی ہے۔ حجاج اکثر حج کو زندگی بدل دینے والے تجربے کے طور پر بیان کرتے ہیں جس کا ان کے ایمان اور خدا کے ساتھ ان کے تعلق پر گہرا اثر پڑتا ہے۔